خواتین ایف ، جے ، کے اور ایچ سے شروع ہونے والے نام نہ رکھیں، زندگی میں برے اثرات مرتب ہوں گے؛ ماہر علم الاعداد مولا داد خان کی بات چیت

 

نیویارک (سپیشل رپورٹر سے ) مولا داد خان کا شمار اگرچہ پاکستان کے ممتاز لیبر لیڈرز میں ہوتا ہے تاہم انہیں علم الاعداد پر بھی خاصا عبور حاصل ہے۔نیویارک میں اپنے بیٹے عمران خان اور بہو بازہ روحی کے زیر اہتمام ایک ملاقات میں کمیونٹی کی مختلف اہم شخصیات اور میڈیا ارکان سے ملاقات میں علم الاعداد بالخصوص زیر بحث رہا۔

مولا داد خان کا کہنا ہے کہ خواتین ایف ، جے ، کے اور ایچ سے شروع ہونے والے نام نہ رکھیں۔ ان حروف سے شروع ہونے والے ناموں کے زندگی پر برے اثرات مرتب ہوتے ہیں ۔ اسی طرح جن خواتین کے نام بی ، کے اور زیڈ سے شروع ہوتے ہیں ، ان کی زندگی میں عروج و زوال کے ففٹی ففٹی امکانات ہوتے ہیں۔ لہٰذا ان حروف سے شروع ہونے والے ناموں سے بھی اجتناب کرنا چاہئیے ۔

 

اس سوال کہ جن خواتین کے نام  ایف ، جے ، کے اور ایچ سے رکھے گئے ہیں، اور والدین نے بچپن میں رکھ دئیے ، وہ کیا کریں، کے جواب میں مولا داد خان نے کہا کہ ایسے کیس میں چاہئیے کہ ان خواتین کا کوئی فیملی میں پیار سے جیسے کوئی نِک نام رکھا جاتا ہے ، وہ رکھ دیا جائے تاجہ اصل نام کے اثرات اچھے نام کے نیچے دب جائیں ۔ دوسرا ایسی خواتین کو پانی کے اوپر کچھ وقت گذارنا چاہئیے۔ قدرتی عمل کے ہے کہ برے اثرات پانی کے اوپر کھڑے ہونے سے نیچے جھڑ جاتے ہیں۔

 

مولا داد خان کا کہناہے کسی بھی شخص کے نام سے اس کے اعداد معلوم کئے جاتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ جس کے نام کا عدد نو ہو ، وہ بہت مضبوط ہوتا ہے ، ایسے شخص سے ٹکرانے والے کا انجام اچھا نہیں ہوتا۔ انہوں نے کہا کہ صدر اوبامہ کے نام کا پہلا نام براق کا عدد نو ہے ۔ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ عمران خان کا عدد انیس بنتا ہے۔ ایسے افراد اپنی ذات میں منفرد ہوتے ہیں ۔

 

مولاداد خان محض شوقیہ علم الاعداد کے حوالے سے بات چیت کرتے ہیں ، وہ نیویارک میں اپنے بیٹے سے ملنے کے بعد آئندہ ہفتے پاکستان واپس روانہ ہو جائیں گے ۔ 

تاریخ اشاعت : 2014-11-15 00:00:00
مقبول ترین خبریں
امیگریشن خبریں

SiteLock